32

ایک دوسرے پر پانی پھینکنے کی انوکھی مذہبی رسم

نیپیدوا: میانمار  میں نئے سال  کو خوش آمدید کہنے کے لیے سالانہ واٹر فیسٹیول کا آغاز ہوگیا جو تین روز تک جاری رہے گا، عوام کی بڑی تعداد نے پہلے روز مذہبی رسم میں حصہ لیا اور پانی کے ہتھیار لئے سڑکوں پر نکل آئے ۔
تفصیلات کے مطابق ہر سال کی طرح امسال بھی 13 سے 16 اپریل تک میانمار میں سالانہ واٹر فیسٹیول کا آغاز ہوگیا، سال نو کے آغاز پر اس فیسٹیول میں ہر عمر کے لوگ شریک ہوئے اور مذہبی رسم کو جوش و جذبے کے ساتھ ادا کیا۔

بدھ مت مذہب تعلق رکھنے والے بچے، بڑے اور خواتین اہم شاہراؤں، گلیوں، محلوں میں واٹر فائٹ کرتے رہے اور ایک دوسرے کو پانی سے نہلایا، فیسٹیول میں شریک ہونے والا ہر شخص اپنے دوست اور عزیز کو پانی سے نہلانے کی کوشش کرتا رہا۔

فیسٹیول کے  دوران ہزاروں افراد شہر کے بیچوں بیچ سڑکوں پر نکل کر پانی سے جنگ کرتے دکھائی دیے، اس موقع پر میانمار کا فنکاروں نے ثقافتی رقص بھی پیش کیا جبکہ حکومت کی جانب سے ملک بھر میں عام تعطیل کا اعلان کیا گیا۔

واضح رہے کہ میانمار میں ہر سال عیسوئی کلینڈر کے حساب سے اپریل کی 13 سے 16 تاریخ تک واٹر فیسٹیول کا انعقاد کیا جاتا ہے، یہ تہوار دراصل بدھ مت مذہب سے تعلق رکھنے والے افراد مذہبی جوش و خروش سے مناتے ہیں جس کا مقصد نئے سال کو خوش آمدید کہنا ہے۔
حکومت کی جانب سے مذہبی تہوار کے پیش نظر ملک بھر میں عام تعطیل کا اعلان کیا جاتا ہے جس کے تحت تمام نجی و سرکاری اور تعلیمی ادارے بند رہتے ہیں اور ہر شخص بڑھ چڑھ کر فیسٹیول میں حصہ لیتا ہے۔
مزید تصاویر دیکھیں

اس خبرکوبھی پڑھیں:  مس امریکا کا تاج نارتھ ڈکوٹا کی حسینہ کے نام

خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔
The post ایک دوسرے پر پانی پھینکنے کی انوکھی مذہبی رسم appeared first on ARYNews.tv | Urdu – Har Lamha Bakhabar.