53

ایف بی آر نے ایمنسٹی اسکیم کو کامیاب قرار دے دیا

کراچی: فیڈرل بورڈ آف ریونیو نے غیر قانونی اثاثے اور کالے دھن کو سفید کرنے کی اسکیم کو کامیاب قرار دیتے ہوئے ایمنسٹی اسکیم میں مزید توسیع نہ کرنے کا اعلان کردیا۔
تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن کی سابق حکومت کی جانب سے غیر قانونی اثاثوں او ر کالے دھن  کو سفید کرنے کے حوالے سے ایمنسٹی اسکیم متعارف کرائی تھی جسے ایف بی آر نے کامیاب قرار دیا، ایمنسٹی کی آخری تاریخ میں صرف 7 روز باقی ہیں۔
ایف بی آر کے مطابق قانونی طور پر اسکیم 20 اپریل سے شروع ہوئی جس میں توسیع کی کوئی قانونی گنجائش  موجود نہیں ہے لہذا متعلقہ افراد اس اسکیم سے 30 جون تک ہی فائدہ اٹھا سکتے ہیں ، مقررہ تاریخ گزرنے کے بعد سخت کارروائی عمل میں لائی جائےگی۔
مزید پڑھیں: ایمنسٹی اسکیم’3 سے چار ارب ڈالر واپسی کا امکان ہے‘
ایف بی آر کا کہنا ہے کہ ایمنسٹی اسکیم غیر معمولی طور پر مقبول ہوئی جس کی وجہ سے چار ارب ڈالر کی آمدن کا امکان ہے جبکہ عالمی ریٹنگز کی ایجنسی موڈیز نے بھی ایمنسٹی کے حوالے سے مثبت امید ظاہر کی تھی۔

دوسری جانب زرائع کا کہنا ہے کہ اسیکم سے تاحال اکیس ارب روپے  حاصل ہوئے جن میں سےسولہ ارب روپے چالان کی صورت میں ایف بی آر کے پاس جبکہ پانچ ارب  ڈالر بینکنگ زرائع سے موصول ہوئے ہیں۔

کراچی میں فیڈریشن ہاؤس کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین ایف بی آر طارق محمود پاشا کا کہنا تھا کہ غیر قانونی اثاثوں کو ظاہر کرنے کا یہ آخری موقع ہے اگر کسی نے اس سے فائدہ نہیں اٹھایا تو پھر وہ کام کے نہیں رہیں گے کیونکہ اگر صبح کا بھولا شام کو واپس گھر آجائے تو اُسے بھولا نہیں کہتے۔
اُن کا کہنا تھا کہ  ہم نے لوگوں کو ٹیکس نیٹ میں لانے میں تاخیر کی، ایمنسٹی اسکیم کے تحت پہلے مرحلے میں 100 افراد کی تفصیلات جمع کی جبکہ ابھی تک 55 لوگوں کی تفصیلات ہمیں موصول ہوئیں۔
چیئرمین ایف بی آر کا کہنا تھا کہ اگر کسی کا پیسہ باہر گیا تو یہ آخری موقع ہے وہ پیسہ واپس لاکر اسے قانونی کروالے وگرنہ ایسا نہ ہو کہ پیسہ ملک میں بھی نہ آئے اور اسے استعمال بھی نہ کیا جاسکے، مقررہ تاریخ گزرنے کے بعد جن لوگوں کی شکایات موصول ہوں گی اُن کے خلاف سخت قانونی کارروائی کی جائے گی۔
یہ بھی پڑھیں: ٹیکس ایمنسٹی اسکیم: خاتمے میں‌ دو ہفتے باقی، ایف بی آر کامیابی کے لیے متحرک ہوگئی
اُن کا کہنا تھا کہ ایمنسٹی اسکیم کی مدت کے حوالے سے تاریخ طےہوچکی  اس میں تبدیلی یا توسیع کے حوالے سے ایف بی آر کا کوئی عمل دخل نہیں ہوگا، جو لوگ اسکیم سے فائدہ نہیں اٹھا رہے انہیں بعد میں جرمانہ اور 70 فیصد ٹیکس ادا کرنا ہوگا جبکہ ایمنسٹی کے تحت متعلقہ اشخاص کو 3 سے 5 فیصد تک ٹیکس ادا کرنا ہوگا۔
بعد ازاں چیئرمین ایف بی آر نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ایمنسٹی اسکیم سے فائدہ اٹھانے یا واپس پیسہ آنے کے اعداد و شمار 30 جون کے بعد جاری کیے جائیں گے، عید الفطر کی تعطیلات کے مطابق اثاثوں کی تفصیلات آن لائن آرہی ہیں اور ہمارے پاس ٹیکس معلومات بھی جمع ہورہی ہے۔
طارق پاشا نے اعلان کیا کہ فیڈرل بورڈ آف ریونیو جلد کثیر المنزلہ عمارات کے خلاف کارروائی کرنے جارہا ہے جس کی تفصیلات جمع کرلی گئیں، جائیدادوں کو ظاہر نہ کرنے والے افراد کے خلاف ایکشن لیا جائے گا۔

اس خبرکوبھی پڑھیں:  پیٹرول اورڈیزل کی قیمت میں کمی کا اعلان

خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔
The post ایف بی آر نے ایمنسٹی اسکیم کو کامیاب قرار دے دیا appeared first on ARYNews.tv | Urdu – Har Lamha Bakhabar.