35

امریکا اور اتحادیوں کو شام پر حملے کا خمیازہ بھگتنا پڑے گا، روس

ماسکو: روس نے شام پر امریکی حملے کو عالمی قوانین کی خلاف ورزی قرار دیتے ہوئے کہا کہ امریکا کو ان اقدامات کا خمیازہ بھگتنا پڑے گا۔
روس کا کہنا تھا کہ شام پر امریکی حملہ کھلی جارحیت ہے جب کہ امریکا عالمی قوانین کی خلاف ورزی کررہا ہے اوراسے ان اقدامات کا خمیازہ بھگتنا پڑے گا۔ روسی حکام نے ٹرمپ کو ہٹلر سے تشبیہ  دیتے ہوئے کہا کہ شامی حکومت کو اخلاقیات کا سبق سکھانے والے خود کو اس سے ماورا سمجھتے ہیں۔
دوسری جانب شام کے صدر بشار الاسد نے حملے کو بین الاقوامی قوانین کی کھلی خلاف ورزی قرار دیا، سرکاری ٹی وی پر اپنے بیان میں ان کا کہنا تھا کہ  شامی فضائیہ نے دشمن کے 13 میزائلوں کو تباہ کردیا۔

Statement by the Ambassador Antonov on the strikes on #Syria:A pre-designed scenario is being implemented. Again, we are being threatened. We warned that such actions will not be left without consequences.All responsibility for them rests with Washington, London and Paris. pic.twitter.com/QEmWEffUzx
— Russia in USA (@RusEmbUSA) April 14, 2018

ادھر امریکا میں تعینات روسی سفیر کا کہنا تھا کہ شام پر حملہ ایسے وقت میں کیا گیا جب وہاں پرامن مستقبل کا موقع دکھائی دے رہا تھا جب کہ شام پر یہ حملہ کھلی جارحیت ہے جس کا ہر حال میں جواب دیا جائے گا۔
The post امریکا اور اتحادیوں کو شام پر حملے کا خمیازہ بھگتنا پڑے گا، روس appeared first on ایکسپریس اردو.